Feb 092018
 

عوام آئندہ الیکشن میں کپتان کی ایکسپائری ڈیٹ کا فیصلہ کر دیں گے، امیر حیدر خان ہوتی

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی صدر امیر حیدر خان ہوتی نے کہا ہے کہ صوبے کے عوام آئندہ الیکشن میں کپتان کی ایکسپائری ڈیٹ کا فیصلہ کر دیں گے،وزارت عظمیٰ کے متلاشی وضاحت کریں کہ ساڑھے چار سال تک خیبر پختونخوا کے عوام کو کس جرم کی سزا دی گئی ، ان خیالات کا اظہار انہوں نے پی کے23ڈاگئی مردان میں ایک بڑے شمولیتی جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے کیا ، اس موقع پر ناظم مجیب الرحمان نے اپنے خاندان اور درجنوں ساتھیوں سمیت اے این پی میں شممولیت کا اعلان کیا ، امیر حیدر خان ہوتی نے پارٹی میں شامل ہونے والوں کو سرخ ٹوپیاں پہنائیں اور انہیں مبارکباد پیش کرتے ہوئے کہا کہ عوام کی اکثریت صوبائی حکومت کی ناقص کارکردگی سے متنفر ہو چکی ہے اور آئے روز جوق در جوق اے این پی میں عوامی شمولیت اس بات کا ثبوت ہے کہ مستقبل اے این پی کا ہے، انہوں نے کہا کہ پنجاب میں جس رفتار سے ترقی ہوئی کوئلے سے بجلی کے منصوبے شروع کئے گئے اور سڑکوں کا جال بچھا دیا گیا ، سندھ میں تھرکول اور بلوچستان میں گوادر کا منصوبہ تیزی سے جاری ہے جبکہ خیبر پختونخوا میں عوام کو بد حال کر دیا گیا اور حکومت نے آخری سال میں اپنی ساکھ کو بچانے کی ناکام کوشش کرنے کیلئے میٹرو پر کام کا آغاز کر دیا ، انہوں نے کہا کہ اگر میٹرو اتنی ہی ضروری تھی تو پہلے سال میں کیوں شروع نہیں کی گئی، امیر حیدر خان ہوتی نے کہا کہ صوبائی حکومت نے صرف گدھوں کی تجارت پر فوکس رکھا ،انہوں نے کہا کہ ادھورے کام چھوڑ کر بھاگنے والوں کے منصوبے اے این پی پورے کرے گی، انہوں نے بلین سونامی ٹری کو مضحکہ خیز قرار دیتے ہوئے کہا کہ70کروڑ درخت خود بخود اُگ آئے ہیں اور کپتان کی ٹیم نے 47سے2018تک اگائے گئے تمام درختوں کا کریڈٹ خود لے لیا ہے لیکن صوبے کے عوام بے وقوف نہیں ہیں، انہوں نے افسوس کا اظہار کیا کہ صوبے کا خزانہ کنگال کر دیا گیا ہے اور مالی بحران اس حد تک شدت اختیار کر گیا ہے کہ آئندہ کئی برس حکمرانوں کا لیا گیا اربوں روپے کا قرضہ اتارنے میں لگ جائیں گے ،انہوں نے کہا کہ صوبے کی 65سالہ تاریخ میں اتنے ترقیاتی کام نہیں ہوئے جتنے اے این پی نے اپنے دور حکومت میں کئے ، امیر حیدر خان نے کہا کہ جلد پشاور سے جنوبی اضلاع تک ہنگامی دورے شروع کئے جائیں گے،انہوں نے کہا کہ نواز شریف چوتھی بار اور عمران پہلی بار وزارت عظمی کے خواہشمند ہیں،تاہم پختونخوا کے عوام باچا خانی چاہتے ہیں اور وہ سونامی کے دھوکے میں نہیں آئیں گے، انہوں نے کہا کہ آئندہ الیکشن میں عوام عمران خان کی سیاست سے ایکسپائری ڈیٹ کا فیصلہ کر دیں گے ، انہوں نے کہا کہ اے این پی دوبارہ اقتدار میں آ کر نوجوانوں کو سود سے پاک قرضے اور ہنر مند خواتین کو اپنے باعزت روزگار کی فراہمی کے مواقع فراہم کرے گی، انہوں نے کہا کہ وفاق سے بجلی منافع کی رقم اور صوبے کے حقوق کا حصول اولیں ترجیح ہو گی اور عوام کے تعاون سے ترقی کا عمل دوبارہ شروع کریں گے۔

[suffusion-the-author]

[suffusion-the-author display='description']