Dec 012017
 

اے این پی کی ایگری کلچر ڈائریکٹوریٹ اینڈ انسٹی ٹیوٹ پر دہشت گردوں کے حملے کی مذمت

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی صدر امیر حیدر خان ہوتی اور جنرل سیکرٹری سردار حسین بابک نے ایگری کلچر ڈائریکٹوریٹ اینڈ انسٹی ٹیوٹ پر حملے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے سانحے میںطلباءکے شہادت پر گہرے رنج و غم کا اظہار کیا ہے ، اپنے مذمتی بیان میں انہوں نے کہا کہ دہشت گردی کے واقعات میں کمی آئی ہے تا ہم مکمل طور پر ختم نہیں ہوئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اے این پی بار ہا مطالبہ کرتی آ رہی ہے کہ دہشت گردوں کو کچلنے کیلئے نیشنل ایکشن پلان پر عمل درآمدیقینی بنایا جائے لیکن ہماری بات کو سنجیدگی سے نہیں لیا جا رہا جس کے باعث دہشت گرد منظم ہو رہے ہیں،اور اس کا خمیازہ پختونخوا کے عوام بھگت رہے ہیں ۔انہوں نے کہا ہے کہ دہشت گردی کا حالیہ واقعہ متحرک دانشوروں، طالب علموں اور درسگاہ کے خلاف ایک بزدلانہ فعل ہے۔انہوں نے کہا کہ دہشت گرد اپنی موجودگی کا احساس دلانے مسلسل حملے کر رہے ہیں،تاہم اگر صورت حال پر قابو نہ پایا گیا تو اس سے بھی بڑی تباہی کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔ انہوں نے سیکورٹی فورسز کی جانب سے بروقت کامیاب کارروائی پر انہیں خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ عوام کی نظریں ان پر ہیں اور ہم ان سے اسی طرح توقع رکھتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کی جانب سے صرف مذمتی بیانات کے علاوہ کوئی ٹھوس حکمت عملی نظر نہیں آ رہی، انہوں نے غمزدہ خاندانوں کے ساتھ دلی ہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اے این پی ان کے غم میں برابر کی شریک ہے ،انہوں نے شہید ہونے والوں کی مغفرت اور زخمیوں کی جلد صحت یابی کیلئے بھی دعا کی اور حکومت سے مطالبہ کیا کہ زخمیوں کو فوری اور بہتر طبی امداد دی جائے۔

[suffusion-the-author]

[suffusion-the-author display='description']