اے این پی نے شاہنواز خانزادہ اور احرار خٹک کی پارٹی رکنیت ختم کر دی

 May-2018, Party News  Comments Off on اے این پی نے شاہنواز خانزادہ اور احرار خٹک کی پارٹی رکنیت ختم کر دی
May 142018
 

اے این پی نے شاہنواز خانزادہ اور احرار خٹک کی پارٹی رکنیت ختم کر دی

پارٹی ڈسپلن کی خلاف ورزی کرنے والوں کیلئے اے این پی میں کوئی جگہ نہیں، امیر حیدر خان ہوتی

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی صدر امیر حیدر خان ہوتی نے پارٹی مخالف سرگرمیوں، متوازی پارٹی بنانے، پارٹی ڈسپلن کی خلاف ورزی کرنے اور آزاد حیثیت سے الیکشن میں حصہ لینے کے اعلان پر نوشہرہ کے احرار خٹک اور صوابی سے تعلق رکھنے والے شاہنواز خانزادہ کی بنیادی رکنیت ختم کر دی ہے ، جبکہ صوبائی جنرل سیکرٹری سردارحسین بابک نے اس کاباقاعدہ نوٹیفیکیشن اے این پی سیکرٹریٹ سے جاری کر دیا ہے ۔
دریں اثنا صوبائی صدر امیر حیدر خان ہوتی نے واضح طور پر کہا ہے کہ متذکرہ بالا دونوں افراد کا اب اے این پی سے کوئی تعلق نہیں ۔ پارٹی ڈسپلن کی خلاف ورزی کرنے والوں کیلئے اے این پی میں کوئی جگہ نہیں اور پارٹی کے دروازے ان پر بند ہیں، انہوں نے کہا کہ کارکن پارٹی آئین پر من وعن عمل کریں اور الیکشن مہم میں اپنے متعلقہ اضلاع میں نامزد امیدواروں کی انتخابی مہم میں بڑھ چڑھ کر حصہ لیں۔

 فلاحی ادارے ڈینگی سے متعلق شعور اجاگر کرنے کیلئے میدان میں آئیں

 Aug-2017, Party News  Comments Off on  فلاحی ادارے ڈینگی سے متعلق شعور اجاگر کرنے کیلئے میدان میں آئیں
Aug 252017
 

 فلاحی ادارے ڈینگی سے متعلق شعور اجاگر کرنے کیلئے میدان میں آئیں، میاں افتخار حسین

پشاور ( پ ر ) میاں راشد شہید فاؤنڈیشن کے چیئرمین میاں افتخار حسین نے تمام فلاحی اداروں اور این جی اوز سے اپیل کی ہے کہ ڈینگی سے متعلق آگاہی مہم کیلئے شہر بھر میں پھیل جائیں اور انسانیت کی خدمت کے جذبے کے تحت عوام میں شعور اجاگر کریں ، پشاور پریس کلب میں راشد شہید فاؤنڈیشن کے زیر اہتمام ڈینگی سے متعلق آگاہی مہم بارے ایک پروگرام سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ سیاست اور پوائنٹ سکورنگ سے بالاتر اس وقت عوام میں شعور اجاگر کرنے کی ضرورت ہے تا کہ مستقبل میں قیمتی انسانی جانوں کو ضائع ہونے سے بچایا جا سکے ،اے این پی کی صوبائی جانئٹ سیکرٹری شگفتہ ملک، ملگری ڈاکٹران کے صدر ڈاکٹر سعید الرحمان، این وائی او کے صوبائی آرگنائزر سنگین خان،انٹامالوجسٹ ڈاکٹر فرمان،، پی ایس ایف کے مرکزی چیئرمین حق نواز خٹک اور سلمان یوسفزئی نے بھی خطاب کیا،میاں افتخار حسین نے کہا کہ جو بھی اس حوالے سے اپنی خدمات پیش کرے اس کو خراج تحسین پیش کیا جانا چاہئے ،تاہم اگر صوبائی حکومت اس بار ڈینگی سے نمٹنے کیلئے تیار نہیں تھی تو اسے مستقبل میں ایسے واقعات سے نمٹنے کیلئے خود کو تیار کرنا چاہئے جبکہ ڈاکٹروں کو بھی ٹریننگ دی جائے ، انہوں نے کہا کہ ہم نے اس حوالے سے ابتداء کر دی ہے اب مزید اداروں اور انفرادی طور پر بھی لوگوں کو ڈینگی سے متاثرہ افراد کی خدمت اور ان میں شعور اجاگر کرنے کی غرض سے آگے آنا چاہئے ، انہوں نے کہا کہ صوبے میں وسائل کی کمی نہیں اور سرکاری و غیر سرکاری ادارے سکولوں ، گلیوں ،محلوں میں پھیل جائیں تاکہ عوام کو مستقبل کیلئے آنے والے ھالات سے مقابلہ کرنے کیلئے تیار کیا جائے ، انہوں نے کہا کہ راشد شہید فاؤنڈیشن کے زیر اہتمام ڈینگی سے متاثرہ علاقوں سمیت دیگر علاقوں میں بھی کل سے مچھر دانیوں اور لوشن کی تقسیم کا عمل شروع کیا جائے گا،ڈاکٹر سعید الرحمان نے اپنے خطاب میں کہا کہ ڈینگی لاروا کھڑے پانی کی وجہ سے جنم لیتا ہے جس کی ابتدائی علامات میں ، سردرد، بخار ، جسم پر سرخ نشانات، کمر اور جسم میں شدید درد اور بعض اوقات ناک سے خون آنے شروع ہو جاتا ہے ایسی صورتحال میں عوام کو چاہئے کہ وہ فوری طور پر ہسپتال کا رخ کریں ، انہوں نے خہا کہ ھکومت اس حوالے سے اپنی ذمہ داری پوری کرے اور صفائی کیلئے ٹھوس اقدامات اٹھائے۔

عوامی نیشنل پارٹی کی منشور کمیٹی کا اجلاس 26جولائی کو طلب کر لیا گیا

 July 2017, Latest, Party News  Comments Off on عوامی نیشنل پارٹی کی منشور کمیٹی کا اجلاس 26جولائی کو طلب کر لیا گیا
Jul 202017
 

 عوامی نیشنل پارٹی کی منشور کمیٹی کا اجلاس 26جولائی کو طلب کر لیا گیا۔

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی سیکرٹری جنرل اور منشور کمیٹی کے چیئرمین میاں افتخار حسین نے 2018کے انتخابات کیلئے بنائی گئی منشور کمیٹی کا اجلاس 26جولائی2017بروزبدھ دوپہر ایک بجے باچا خان مرکز میں طلب کر لیا ہے جس میں ملک بھر سے منشور کے حوالے سے موصول ہونے والی تجاویز کا جائزہ لیا جائے گا، کمیٹی کے سیکرٹری سردار حسین بابک نے تمام ممبران سے اجلاس میں بروقت شرکت کی اپیل کی ہے۔

عبدالستار ایدھی کی وفات پر تین روزہ سوگ کا اعلان

 Party News  Comments Off on عبدالستار ایدھی کی وفات پر تین روزہ سوگ کا اعلان
Jul 102016
 

مورخہ : 10جولائی 2016

پشاور( پ ۔ر ) عوامی نیشنل پارٹی خیبر پختون خوا نے عبدالستار ایدھی کی وفات پر 3روزہ سوگ کا اعلان کردیا ،باچاخان مرکز سمیت تما م اضلاع میں قرآن خوانی کی جائے گی سابق وزیراعلیٰ اور اے این پی کے صوبائی صدر امیرحیدرخان ہوتی ایم این اے جو ان دنوں بیرون ملک نجی دورے پرہیں نے ٹیلی فون پر صحافیوں کو بتایا کہ عبدالستار ایدھی عظیم انسان تھے اور انہوں نے ساری زندگی رنگ ونسل اورمذہب سے بالاتر ہوکر انسانیت کی خدمت کی ہے اوران کے وفات سے پیدا ہونے والا خلاصدیوں پر نہیں ہوگا،وہ تاریکیوں میں امید کی کرن تھے امیرحیدرخان ہوتی نے کہاکہ ایدھی صاحب حقیقت میں درویش اورفرشتہ صفت انسان تھے انہوں نے رحلت کی سفر پر جاتے ہوئے آنکھوں کا عطیہ دے کر بھی خدمت میں ممتاز مثال قائم کردی ہے انہوں نے کہاکہ عبدالستار ایدھی کی وفات سے پوری انسانیت یتیم ہوگئی ہے امیرحیدرخان ہوتی نے عبدالستار ایدھی کی بلند درجات کی دعا کرتے ہوئے بیوہ بلقیس ایدھی ،بیٹے فیصل ایدھی اور دیگر سوگواروں سے دلی تعزیت کا اظہار کرتے ہوئے کہاکہ اس عظیم سانحے اورغم میں اے این پی آپ کے ساتھ ہے انہوں نے کہاکہ اے این پی عظیم انسانی خدمت گار کی رحلت کے باعث تین روزہ سوگ منائے گی اور باچاخان مرکز سمیت ضلعی دفاتر میں قرآن خوانی اور فاتحہ خوانی کی جائے گی ۔

الیکشن 2018میں کامیابی کیلئے مدرسہ حقانیہ کو 30کروڑ روپے کی قسط ادا کی گئی

 Party News  Comments Off on الیکشن 2018میں کامیابی کیلئے مدرسہ حقانیہ کو 30کروڑ روپے کی قسط ادا کی گئی
Jun 302016
 

مورخہ 30جون 2016ء بروز جمعرات

الیکشن 2018میں کامیابی کیلئے مدرسہ حقانیہ کو 30کروڑ روپے کی قسط ادا کی گئی ، سردار حسین بابک
حکیم اللہ محسود کے بل بوتے پر اقتدار حاصل کرنے والوں کا دور گزر چکا ہے ،
نیشنل ایکشن پلان اور آپریشن ضرب عضب کے باوجود کپتان کی سوچ میں تبدیلی نہیں آئی
خیبر بنک سکینڈل کی رپورٹ منظر عام پر نہ لا کر ایک بار پھر کرپشن کی گئی ،بلین ٹری میں بڑے بڑے نام سامنے آ رہے ہیں
جو لوگ ماضی میں کونسلر بننے کے اہل نہیں تھے وہ حکیم اللہ محسود کی معاونت سے ایوانوں تک جا پہنچے
لڑکیوں کی تعلیم اور پولیو مہم کی مخالفت کرنے والے مذہبی جنونیوں کو عمران خان سرٹیفیکیٹ دے رہے ہیں

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی جنرل سیکرٹری و پارلیمانی لیڈر سردار حسین بابک نے کہا ہے کہ پختون قوم تبدیلی کے نام پر ووٹ دے کر پچھتا رہی ہے تاہم اب 2018 کے الیکشن میں کوئی حکیم اللہ محسود پی ٹی آئی کو سپورٹ کرنے نہیں آئے گا،صوبے میں نسبتاً جو امن قائم تھا اس کا تمام کریڈٹ اے این پی کو جاتا ہے اور اس امن میں ہمارے سینکڑوں شہداء کا خون شامل ہے ،اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ مدرسہ حقانیہ کو 30کروڑ روپے کی رشوت آئندہ الیکشن میں کامیابی کیلئے دی گئی تاہم اب ایسا نہیں ہو گا اور ان کے ہمدرد پی ٹی آئی کو اقتدر نہیں دلوا سکیں گے عوام یہ بات جان چکے ہیں کہ صوبے کے حقوق کا تحفظ اے این پی کے بغیر کوئی دوسری قوت نہیں کر سکتی ، انہوں نے مزید کہا کہ اے این پی پختونوں کے حقوق کی محافظ جمہوریت پسند اور خدائی خدمت گار تحریک کی تسلسل جماعت ہے اور اپنے راستے میں آنے والی ہر دیوار کو گرانے کی طاقت رکھتی ہے، انہوں نے کہا کہ ماضی میں اس جماعت کو کمزور کرنے کی ناکام کوششیں کی گئیں لیکن سہاروں اور دہشتگردوں کی معاونت سے ایوانوں میں پہنچنے والوں کی سازشیں ناکام ہوئیں اور وقت کی ہماری وکالت کرتے ہوئے ثابت کیا کہ ہم پر کیچڑ اچھالنے والے خود اس جال میں پھنس گئے ، سردار حسین بابک نے کہا کہ خان صاحب آج اس سوچ سے تعلق رکھنے والے عناصر کو سرٹیفیکیٹ دے رہے ہیں جن مذہبی جنونیوں نے پختون معاشرے میں لڑکیوں کی تعلیم اور پولیو مہم کے خلاف کس قدر بلیک میلنگ کی اور کتنی ہی مراعات لیں ،انہوں نے کہا کہ خیبر بنک کی نجکاری کی مذموم سازش کبھی کامیاب نہیں ہونے دینگے جبکہ بلین ٹری سونامی میں بھی اب بڑے بڑے نام سامنے آنا شروع ہو گئے ہیں ، انہوں نے کہا کہ محکمہ صحت اور دیگر شعبوں کو پی ٹی آئی کے مالی معاونین کے ہاتھوں فروخت کرنے پر اے این پی کبھی خاموش نہیں رہے گی ،صوبائی جنرل سیکرٹری نے کہا کہ اے این پی کی تاریخ قربانیوں سے بھری پڑی ہے جو لوگ ماضی میں کونسلر بننے کے اہل نہیں تھے وہ حکیم اللہ محسود کی معاونت سے ایوانوں تک جا پہنچے تاہم 2018میں کوئی حکیم اللہ نہیں آئے گا اور پختون قوم اپنے ساتھ دھوکہ کرنے والوں کو گھر بھیج دے گی ، انہوں نے کہا کہ آئندہ الیکشن میں اے این پی کلین سویپ کرے گی اور صوبے میں ترقی کا رک جانے والا پہیہ دوبارہ چلنے لگے گا،صوبائی جنرل سیکرٹری نے کہا کہ صوبے کی خوشحالی اور ترقی کیلئے ہم نے اپنی حکومت میں جو منصوبے مکمل کئے ملک کی 65سالہ تاریخ میں اس کی مثال نہیں ملتی تاہم یہ بات قابل افسوس ہے کہ آج ایسے لوگوں کو اقتدار سونپا گیا ہے جن میں نہ تو حکومت چلانے کی صلاحیت ہے ا ور نہ ہی انہیں صوبے کے مفادات سے کوئی دلچسپی ہے اور اسی کا نتیجہ ہے کہ عوام ووٹ دینے کے اپنے فیصلے پر پچھتا رہے ہیں اور اے این پی اس خطے کی نمائندہ پارٹی کے طور پر پھر سے اپنی جگہ پا رہی ہے ، انہوں نے کہا کہ بہت سی قوتیں انتہا پسندی کے معاملے پر مصلحت ، خوف اور دباؤ کا شکار ہیں تاہم اے این پی تمام تر قربانیوں ، زیادتیوں اور دباؤ کے باوجود میدان میں ڈٹی ہوئی ہے اور ہماری تحریک ، جدوجہد اس وقت تک جاری رہے گی جب تک اس خطے اور صوبے کو امن اور ترقی کا گہوارا نہیں بنایا جاتا ، انہوں نے کہا کہ اے این پی 2018ء کے الیکشن کیلئے بھرپور تیاری کر رہی ہے۔

فوج ،جماعت اسلامی اور پی ٹی آئی کی طالبان دوست پالیسیوں کے خلاف ایکشن لے، زاہد خان

 June-2016, Party News  Comments Off on فوج ،جماعت اسلامی اور پی ٹی آئی کی طالبان دوست پالیسیوں کے خلاف ایکشن لے، زاہد خان
Jun 032016
 

مورخہ 3 جون 2016ء بروز جمعہ

فوج ،جماعت اسلامی اور پی ٹی آئی کی طالبان دوست پالیسیوں کے خلاف ایکشن لے، زاہد خان
ٹی وی شوز میں ملا منصور اختر کو شہید قرار دینا قابل مذمت ہے ،شہداء کی قربانیوں پر سولیہ نشان کھڑا کیا گیا،
جماعت اسلامی اور پی ٹی آئی کے اسمبلیوں میں موجود نمائندے دراصل طالبان کے پولیٹیکل ونگ ہیں
صورتحال سنگین ہے،تاجروں اور کاروباری طبقے سے بھتہ وصولی کی وجہ سے صوبے سے کاروبار سمیٹا جا رہا ہے

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی ترجمان زاہد خان نے پی ٹی آئی کے ترجمان نعیم الحق کی طرف سے مطلوب دہشت گرد ملا منصور کو ٹی وی ٹاک شو میں شہید قرار دینے کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ افواج پاکستان اور قومی سلامتی کے ادارے پی ٹی آئی اور جماعت اسلامی کی طالبان دوستی و سرپرستی پالیسی کے خلاف آئین پاکستان کے مطابق فوری اقدامات اٹھائیں ، اپنے ایک بیان میں زاہد خان نے کہا کہ افواج پاکستان کے جوانوں اور افسروں کے خلاف جنگ کرنے والے حکیم اللہ محسود اور ساتھیوں کو بھی جماعت اسلامی کے امیر منور حسن نے شہید قرار دیا تھا اور افواج پاکستان کے شہداء کے بارے میں سوالیہ نشان چھوڑا تھا، انہوں نے کہا کہ دونوں جماعتیں دراصل پاکستان میں نفرت ، انتہا پسندی ،دہشت گردی کے بیج بونے والی جماعتیں ہیں اور دونوں ہی افواج پاکستان اور سیاسی قیادت و حب الوطن شہریوں کی وطن کیلئے قربانیوں کو تسلیم نہ کر کے اپنے بیرونی آقاؤں کی نوکری پکی کر رہی ہیں، انہوں نے کہا کہ عمران خان عرف طالبان خان نے وزیرستان آپریشن کے خلاف بیانات دیئے، دہشت گردوں کے سہولت کاروں مددگاروں اور سرپرستوں کو پارٹی ٹکٹ جاری کئے گئے،، انہوں نے کہا کہ جماعت اسلامی اور پی ٹی آئی کے اسمبلیوں میں موجود نمائندے دراصل طالبان کے پولیٹیکل ونگ ہیں،
زاہد خان نے کہا کہ خیبر پختونخوا میں جماعت اسلامی اور پی ٹی آئی کی سرپرستی میں عملاً طالبان کے حوالے ہے ،تاجروں اور کاروباری طبقے سے بھتہ وصولی کی وجہ سے صوبے سے کاروبار سمیٹا جا رہا ہے، اے این پی حکومت نے تعلیمی اداروں اور ہسپتالوں کا جال بچھایا لیکن جماعت اسلامی اور پی ٹی آئی کی صوبائی حکومت کے دور میں صوبائی دارالحکومت کا نرسنگ ٹریننگ سکول بند ہونے سے مریضوں کی خدمت کرنے والی نرسیں بے روزگار ہو گئی ہیں، انہوں نے کہا کہ دہشت گردی کو روکنے کیلئے قائم مالاکنڈ کی خصوصی فورس کے ملازم بھی فارغ کر دیئے گئے ہیں جو اس بات کا ثبوت ہے کہ صوبائی حکومت میں شامل جماعتیں دہشت گردوں کی مدد گار ہیں

اے این پی کے سربراہ اسفندیار ولی خان کی جانب سے آرمی چیف کے فیصلے کا خیر مقدم

 April-2016, Latest, Party News, PRs-2016  Comments Off on اے این پی کے سربراہ اسفندیار ولی خان کی جانب سے آرمی چیف کے فیصلے کا خیر مقدم
Apr 212016
 

مورخہ 21اپریل2016ء بروز جمعرات

اے این پی کے سربراہ اسفندیار ولی خان کی جانب سے آرمی چیف کے فیصلے کا خیر مقدم
آرمی چیف نے اپنے ادارے سے احتساب کے عمل کا آغاز کر کے اچھی روایت کی بنیاد ڈال دی ہے۔
ملک کے دوسرے ریاستی اداروں کے سربراہان کو بھی آرمی چیف کی تقلید کر کے ادارہ جاتی احتساب کا آغاز کرنا چاہیے۔
دہشتگردی کی طرح کرپشن کے ناسور نے بھی پاکستان کی ساکھ ، ترقی اور استحکام کو بری طرح نقصان پہنچایا ہے۔

پشاور ( پریس ریلیز) عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی سربراہ اسفندیار ولی خان نے آرمی چیف جنرل راحیل شریف کی جانب سے فوج میں احتسابی عمل کے عملی آغاز کا خیر مقدم کرتے ہوئے اس فیصلے کی تائید اور ستائش کی ہے اور تمام ریاستی اداروں پر زور دیا ہے کہ وہ اپنے اپنے اداروں میں کرپشن کے خلاف عملی اقدامات کریں تاکہ ملک سے اس ناسور کا خاتمہ کیا جا سکے۔
اے این پی سیکرٹریٹ سے جاریکردہ بیان میں اُنہوں نے آرمی چیف کے حالیہ اقدام کو غیر معمولی اور ناگزیر قرار دیتے ہوئے اس کا خیر مقدم کیا ہے کہ اپنے ادارے سے احتسابی عمل کا آغاز سے ایک اچھی روایت ہے اور اس کو جاری رکھنا چاہیے۔ اُنہوں نے کہا کہ دہشتگردی کی طرح کرپشن نے بھی ملک کیلئے ایک ناسور کی شکل اختیار کی ہوئی ہے اور اس کے باعث نہ صرف یہ کہ ادارہ جاتی اور انتظامی ڈھانچے برباد ہو کر رہ گئے ہیں بلکہ ملک کی ترقی اور استحکام کا عمل بھی بری طرح متاثر ہوتا آیا ہے۔
اُنہوں نے کہا کہ آرمی چیف کے حالیہ فیصلے سے جہاں ایک طرف کرپشن کی حوصلہ شکنی اور خاتمے کا راستہ ہموار ہو گا وہاں ملکی اور عالمی سطح پر پاکستان کی ساکھ ، شہرت اور نیک نامی میں بھی بہتری آئے گی۔ اُنہوں نے مزید کہا ہے کہ اس عمل کو مستقبل میں جاری رہنا چاہیے تاکہ عملی طور پر یہ پیغام دیا جائے کہ کوئی بھی مواخذے سے مبریٰ نہیں ہے۔ اُنہوں نے کہا کہ دوسرے ریاستی اور حکومتی اداروں کے سربراہان کو بھی آرمی چیف کی تقلید کرتے ہوئے اپنے اپنے اداروں میں ایسے افراد کے احتساب کا آغاز کرنا چاہیے جو کہ کرپشن میں ملوث رہے ہیں۔
اے این پی کے سربراہ نے مزید کہا ہے کہ ملک کی نیک نامی ، ترقی اور استحکام کیلئے کرپشن کا خاتمہ ناگزیر ہو چکا ہے اور اس ضمن میں کسی قسم کی مصلحت یا تاخیر سے کام نہیں لینا چاہیے تاکہ اس ناسور سے پاکستان کو چھٹکارا دلایا جائے۔