اے این پی بلوچستان کے بزرگ رہنما سائیں انور خان شیرانی کی بلاجواز گرفتاری پر پارٹی کا شدید رد عمل

 March-2016, PRs-2016  Comments Off on اے این پی بلوچستان کے بزرگ رہنما سائیں انور خان شیرانی کی بلاجواز گرفتاری پر پارٹی کا شدید رد عمل
Mar 312016
 

مورخہ : 31.3.2016 بروز جمعرات

اے این پی بلوچستان کے بزرگ رہنما سائیں انور خان شیرانی کی بلاجواز گرفتاری پر پارٹی کا شدید رد عمل۔
کسی کو بھی پر امن سیاسی سرگرمیوں یا احتجاج سے بزور طاقت محروم نہیں رکھا جا سکتا۔
سائیں انور شیرانی کی بلا جواز گرفتاری نے صوبائی حکومت کے غیر جمہوری رویے کو بے نقاب کر دیا ہے۔
بزرگ رہنما کو فوراً رہا کیا جائے اور ذمہ داران کے خلاف کارروائی کی جائے ۔ گرفتاری پر زاہد خان اور اصغر خان اچکزئی کا بیان

پشاور ( پریس ریلیز ) عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات زاہد خان اور اے این پی صوبہ بلوچستان کے صدر اصغر خان اچکزئی نے ژوب میں پارٹی کے سینئر رہنما اور صوبائی ورکنگ کمیٹی کے ممبر سائیں انور شیرانی کی بے جا گرفتاری پر تشویش اور غصے کا اظہار کرتے ہوئے صوبائی حکومت کے رویے کی مذمت اور گرفتار رہنما کی فوری رہائی کا مطالبہ کیا ہے۔
اے این پی سیکرٹریٹ سے جاریکردہ مذمتی بیان میں دونوں رہنماؤں نے سائیں انور شیرانی کی ژوب میں پولیس کے ہاتھوں بلاجواز گرفتاری پر افسوس کا اظہار کیا ہے اور کہا ہے کہ پر امن احتجاج کے نتیجے میں نکالے گئے جلوس کی پاداش میں دیگر کارکنوں کے علاوہ سائیں انور خان شیرانی جیسے بزرگ رہنما کی گرفتاری نے صوبائی حکومت کے غیر جمہوری رویے کو بے نقاب کر دیا ہے۔اُنہوں نے کہا کہ یہ انتہائی افسوس اور شرم کی بات ہے کہ یہ اقدام ایک ایسی صوبائی حکومت کی جانب سے اُٹھایا گیا جس کے سربراہان قوم پرستی اور جمہوریت پسندی کا دعویٰ کرتے آ رہے ہیں۔
اُنہوں نے مزید کہا ہے کہ سیاسی طریقے سے پر امن احتجاج کرنا یا کسی بھی سیاسی سرگرمی میں حصہ لینا ہر شہری کا بنیادی حق ہے اور کسی کو بھی حکومت کی طاقت کے ذریعے اس جمہوری حق سے محروم نہیں کیا جاسکتا۔ اُنہوں نے کہا کہ سائیں انور شیرانی کا شمار پشتون قوم پرستوں کی اس نسل میں ہوتا آیا ہے جنہوں نے انتہائی جبر اور تشدد کے سیاسی ماحول میں اپنی مٹی اور عوام کے حقوق کی آواز اُٹھائی اور اس جدوجہد میں بے مثال قربانیاں دیں۔ اُنہوں نے کہا کہ بلوچستان حکومت کی جانب سے اتنے سینئر رہنما کو گرفتار کرنا اور ان کو مسلسل پابند سلاسل رکھنا بہت سے سوالات کو جنم دینے کا سبب بنا ہوا ہے۔ اُنہوں نے حکومت سے سائیں انور خان شیرانی کی فوری رہائی کے علاوہ ان حکام کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کیا ہے جنہوں نے اتنے بزرگ رہنما پر ہاتھ ڈالا اور ان کے ساتھ مجرموں جیسا سلوک روا رکھا۔

صحت سہولیات کے بلند وبانگ دعوے صرف اخبارات کی زینت ہیں، ہارون بشیر بلور

 March-2016, PRs-2016  Comments Off on صحت سہولیات کے بلند وبانگ دعوے صرف اخبارات کی زینت ہیں، ہارون بشیر بلور
Mar 312016
 

مورخہ 31مارچ 2016ء بروز جمعرات

صحت سہولیات کے بلند وبانگ دعوے صرف اخبارات کی زینت ہیں، ہارون بشیر بلور
ڈائیلاسز مشینوں کی خرابی کے باعث عوام کی جانیں ضائع ہو رہی ہیں لیکن کسی حکومتی اہلکار نے نوٹس نہیں لیا ۔
حکومتی ٹیم نے اپنی توجہ بلین ٹری پر مرکوز کر رکھی ہے جس میں کرپشن کے حالیہ انکشاف نے نیا پنڈورا بکس کھول دیا ہے

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی سیکرٹری اطلاعات ہارون بشیر بلور نے خیبر ٹیچنگ ہسپتال میں ڈائیلاسز مشینوں کی خرابی کے باعث 5افراد کی ہلاکت پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کرتے ہوئے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ واقعے کی تحقیقات کر کے ذمہ داروں کے خلاف کاروائی کی جائے ، اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ حکومت آئے روز صحت سہولیات کے بارے میں بلند و بانگ دعوؤں میں مصروف ہے تاہم ہسپتالوں میں ہونے والی ہلاکتیں حکمرانوں کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہیں ، انہوں نے غمزدہ خاندانوں کے ساتھ دلی ہمدردی کا اظہار کیا اور مزید کہا کہ یونیسف کی حالیہ رپورٹ میں صوبے کے بیشتر اضلاع کو صحت کے حوالے سے ہائی رسک ایریاز قرار دیا گیا ہے اور ان اضلاع میں ایسے علاقے بھی ہیں جہاں صحت کی سہولیات موجود ہی نہیں رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ان ایریاز میں موذی امراض پھیلنے کا خدشہ ہے تاہم حکومتی کارکردگی سوشل میڈیا اور اخبارات تک محدود ہے ، اور پوری ٹیم نے اپنی توجہ بلین ٹری پر مرکوز کر رکھی ہے جس میں ہو نے والی کرپشن کے حالیہ انکشافات نے نیا پنڈورا بکس کھول دیا ہے ، انہوں نے کہا کہ ہسپتالوں کی حالت زار کے باعث غریب عوام پریشان ہیں اور آئے روز ہونے والی ہلاکتوں نے عام شہریوں کو ذہنی کرب میں مبتلا کر دیا ہے ،انہوں نے اس امر پر افسوس کا اظہار کیا کہ صوبے کے تدریسی ہسپتالوں میں صحت کی سہولیات کا نام و نشان تک نہیں جبکہ پیرا میڈیکس بھی اپنے مطالبات کیلئے احتجاج پر ہیں اور حکومت ان کے مطالبات تسلیم کرنے سے گریزاں ہے۔ انہوں نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ صوبے کے عوام کی حالت زار پر توجہ دے کر مینڈیٹ کا حق ادا کیا جائے۔

صوبے کے بدترین مالی بحران نے حکمرانوں کو بے نقاب کر دیا ہے، سردار حسین بابک

 March-2016, PRs-2016  Comments Off on صوبے کے بدترین مالی بحران نے حکمرانوں کو بے نقاب کر دیا ہے، سردار حسین بابک
Mar 312016
 

مورخہ 31مارچ 2016ء بروز جمعرات
صوبے کے بدترین مالی بحران نے حکمرانوں کو بے نقاب کر دیا ہے، سردار حسین بابک
حکومت فنڈز کے بروقت استعمال اور محاصل کے اہداف حاصل کرنے میں بری طرح ناکامی کا غصہ افسران پر نکالنے کے درپے ہے
تحریک انصاف کے چیئرمین کی صوبے کے معاملات میں بے جا مداخلت اور ان کے تصوراتی ایجنڈے نے صوبے کو پیچھے دھکیل دیا ہے ،
میڈیا اور دہشت گردوں کے بل بوتے پر صوبے کی حکمران بننے والی تبدیلی سرکار عوام کو منہ دکھانے کے قابل نہیں رہی

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی جنرل سیکرٹری و پارلیمانی لیڈر سردار حسین بابک نے کہا ہے کہ صوبائی حکومت کا بدترین مالی بحران ان کی نا اہلی کا مظہر ہے ، اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ حکومت ایک طرف فنڈز کے بروقت استعمال میں ناکامی اور دوسری طرف محاصل کا ہدف پورا نہ کرنے کے گھمبیر مسئلے سے دوچار ہے جس سے صوبے کی بدترین اور کمزور ترین گورننس کا اندازہ لگانا مشکل نہیں ہے انہوں نے کہا کہ میڈیا اور دہشت گردوں کے بل بوتے پر صوبے کی حکمران بننے والی تبدیلی سرکار عوام کو منہ دکھانے کے قابل نہیں رہی ہے ، صوبائی جنرل سیکرٹری نے کہا کہ موجودہ صوبائی حکومت فنڈز کے بروقت استعمال میں ناکامی اور محاصل کے اہداف حاصل کرنے میں بری طرح ناکامی کا غصہ افسران پر نکالنے کے درپے ہے جبکہ صوبائی حکومت جب سے اقتدار میں آئی ہے صوبے میں سیاسی مخالفین اور سرکاری افسران کی پگڑیاں اچھالنے کا کوئی موقع ہاتھ سے جانے نہیں دیتی، انہوں نے کہا کہ صوبائی حکومت اپنی ذمہ داریوں سے غفلت اور لاپرواہی کا ملبہ مرکزی حکومت پر ڈال کر صوبے کے عوام کو بیوقوف بنانے کے چکر میں ہے تاہم عوام ان کے اصل چہرہ دیکھ چکے ہیں ، انہوں نے کہا کہ صوبے کے مسائل و مشکلات کو خاطر میں نہ لاتے ہوئے فنڈز کے 17فیصد استعمال اور محاصل کے اہداف کے حصول میں 80فیصد ناکامی تبدیلی سرکار کی کارگزاری کا واضح ثبوت ہیں۔
سردار حسین بابک نے کہا کہ حکومت نے صوبے کو مشکلات و مسائل کی دلدل میں دھکیل دیا ہے جبکہ میڈیا کے سامنے جھوٹ اور فریب کے دعوے کی پالیسی پر گامزن ہیں ،انہوں نے کہا کہ سرکاری ملازمین آئے روز احتجاج پر مجبور ہیں ، ٹارگٹ کلنگ ، بھتہ خوری ،اغواء برائے تاوان اور لاقانونیت نے عوام کو ذہنی مریض بنا دیا ہے ، جبکہ ترقیاتی کام نہ ہونے کی وجہ سے بے روزگاری کا طوفان کھڑا کر دیا گیا ہے ، انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف کے چیئرمین کی صوبے کے معاملات میں بے جا مداخلت اور ان کے تصوراتی ایجنڈے نے صوبے کو پیچھے دھکیل دیا ہے ، وزراء اور حکومتی ذمہ دار اسمبلی کے فلور پر اپنی بے اختیاری اور بے بسی کا رونا رو رہے ہیں ، انہوں نے کہا کہ صوبائی حکومت کو ہوش کے ناخن لینے چاہئیں اور صوبے کے عوام کے ساتھ زیادتیاں اور ان کی مشکلات میں اضافے کی پالیسی کو ختم کرنا چاہئے۔

پنجا ب میں کارروائیاں کیے بغیر پاکستان اور خطے سے دہشتگردی کا خاتمہ ممکن نہیں ہے

 March-2016, PRs-2016  Comments Off on پنجا ب میں کارروائیاں کیے بغیر پاکستان اور خطے سے دہشتگردی کا خاتمہ ممکن نہیں ہے
Mar 302016
 

مورخہ 30مارچ 2016ء بروز بدھ

پنجا ب میں کارروائیاں کیے بغیر پاکستان اور خطے سے دہشتگردی کا خاتمہ ممکن نہیں ہے۔ میاں افتخار حسین
حکومت اور بعض قوتوں نے وقتی بچاؤ کیلئے پنجاب میں کارروائیوں کی بجائے مصلحت سے کام لیا۔
نیشنل ایکشن پلان کو ری وزٹ کرنے کیلئے اے پی سی بلائی جائے۔ بلاامتیاز کاروائیاں ناگزیر ہو چکی ہیں۔
ہم پنجاب کے دُکھ اور تکلیف میں برابر کے شریک ہیں۔ لاہور میں زخمیوں کی عیادت کے بعد میڈیا سے بات چیت

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی سیکرٹری جنرل میاں افتخار حسین نے کہا ہے کہ پاکستان کی سلامتی اور امن کو یقینی بنانے کیلئے تمام دہشتگرد تنظیموں کے خلاف بلا امتیاز کارروائیوں کی اشد ضرورت ہے اور کوئی بھی مفاہمت یا تعطل دہشتگردوں کی قوت اور صلاحیت میں اضافے کی وجہ بن سکتی ہے۔ اگر پنجاب میں مفاہمت کی بجائے آپریشن کرائے گئے ہوتے تو نہ صرف یہ کہ لاہور حملوں سے بچ جاتا بلکہ ملک سے دہشتگردوں کا خاتمہ بھی یقینی ہو جاتا کیونکہ پنجاب کی 70 کالعدم تنظیمیں نہ صرف یہ کہ بہت منظم ، تربیت یافتہ اور خطر ناک ہیں بلکہ یہ ملک کے دوسرے صوبوں میں بھی کارروائیاں کرتی آئی ہیں۔
اے این پی سیکرٹریٹ سے جاریکردہ بیان کے مطابق میاں افتخار حسین نے لاہور کے شیخ زید اور جناح ہسپتالوں میں سانحہ لاہور کے زخمیوں کی عیادت کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پنجاب دہشتگرد تنظیموں کا گڑھ رہا ہے اور ان کا خاتمہ کیے بغیر امن و امان کی بحالی اور دہشتگردی کا خاتمہ ممکن نہیں ہے۔ اُنہوں نے کہا کہ ہم بیس پچیس برسوں سے دہشتگردی کے نتائج اور اثرات بھگتتے آرہے ہیں اس لیے ہم لاہور اور پنجاب کے دُکھ اور صدمے کو سمجھ سکتے ہیں۔ ہم پنجاب سے اظہار ہمدردی کرنے لاہور آئے ہیں تاکہ ان کو پیغام دیا جا سکے کہ ہم ان کے درد میں برابر کے شریک ہیں۔
اُنہوں نے کہا یہ بڑے افسوس کی بات ہے کہ حکومت اور بعض قوتوں نے وقتی فائدے اور خطرہ ٹالنے کیلئے پنجاب میں مصلحت سے کام لیا جس کا نتیجہ یہ نکلا کہ پنجاب میں دہشتگردوں پر ہاتھ ڈالنے سے گریز کیا گیا اور وہ ریاستی کارروائیوں سے محفوظ رہے۔ اُنہوں نے کہا کہ اگر نیشنل ایکشن پلان پر بلاامتیاز عمل کیا جاتا اور مصلحت سے کام نہیں لیا جاتا تو صورتحال کافی بہتر ہوتی۔ اُنہوں نے کہا کہ کرسی بچانے سے زیادہ اہم یہ ہے کہ پاکستان کی سلامتی اور مستقبل کی فکر کی جائے اور اے پی سی بلا کر نیشنل ایکشن پلان کو ری وزٹ کیا جائے تاکہ ہر قیمت پر دہشتگردی کا خاتمہ ممکن بنایا جاسکے۔ اُنہوں نے کہا کہ منظم طریقے سے گڈ اور بیڈ کا امتیاز کیے بغیر کارروائیاں ناگزیر ہو چکی ہیں اور مزید تاخیر یا مصلحت انتہائی خطرناک ثابت ہو سکتی ہے۔ اُنہوں نے کہا کہ ہم باچا خان کے فلسفہ عدم تشدد کے علمبردار ہیں اور ہماری کوشش اور خواہش ہے کہ پاکستان سمیت دُنیا بھر سے دہشتگردی اور شدت پسندی کا خاتمہ ہو۔

عوامی نیشنل پارٹی اپنے اسلاف کے افکار کو مشعل راہ گردانتی ہے،امیر حیدر خان ہوتی

 March-2016, PRs-2016  Comments Off on عوامی نیشنل پارٹی اپنے اسلاف کے افکار کو مشعل راہ گردانتی ہے،امیر حیدر خان ہوتی
Mar 302016
 

مورخہ 30مارچ 2016ء بروز بدھ
عوامی نیشنل پارٹی اپنے اسلاف کے افکار کو مشعل راہ گردانتی ہے،امیر حیدر خان ہوتی
پختون قومی تحریک کو پروان چڑھانے میں عاصی ہشتنگری جیسے قلم کاروں کے کردار کو فراموش نہیں کیاجاسکتا
پشتو زبان کی ترقی کے لیے عاصی مرحوم کی خدمات کو تاریخ میں سنہری حروف سے لکھا جائے گا
مرحوم مرتے دم تک باچاخان کے سچے پیروکاراور ولی خان کے عقیدت مند رہے
پشتو کے معروف قوم پرست شاعر،ادیب اور صحافی عاصی ہشتنگری کی انیسویں برسی پرصوبائی صدرکاپیغام
پشاور(پ،ر) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی صدر اور سابق وزیراعلیٰ امیرحیدرخان ہوتی نے کہا ہے کہ پشتو زبان کی ترقی و ترویج اور پختونوں کے حقوق کے حصول کے لیے مرحوم عاصی ہشتنگری کی خدمات کو پختونوں کی تاریخ میں سنہری حروف سے لکھا جائے گا، اے این پی سیکرٹریٹ سے جاری کردہ بیان میں صوبائی صدر نے پشتو زبان کے معروف قوم پرست اور ترقی پسند شاعر،ادیب اور صحافی عاصی ہشتنگری کی انیسویں برسی کے حوالے سے کہا کہ عاصی ہشتنگری نے بطور شاعر،ادیب اور صحافی ہمیشہ اپنی قوم میں آزادی،امن اور ترقی کا شعور اجاگرکیااور اپنی مٹی سے پیارکرنے کا درس دیاہے،انہوں نے ملک میں جمہوریت کی بحالی اور امریت کے خلاف ہمیشہ قلمی جہاد جاری رکھا جس کی پاداش میں بہت سی مشکلات بھی برداشت کیں تاہم اپنے نظریات پر قائم رہے،مرحوم مرتے دم تک فخرافغان باچاخان کے ایک سچے پیروکار، خان عبدالولی خان اور اجمل خٹک کے وفادار ساتھی رہے،مرحوم کاشمار ان پختون قوم پرست اور ترقی پسند شعراء میں ہوتاہے جنہوں نے مالی تنگدستی،غربت، ہرقسم مشکلات اور جلاوطنی کی زندگی گزارنے کے باوجود اپنے نظریے کا دیا جلائے رکھا ان کی شاعری دنیا کے تمام مظلوم و محکوم اقوام کی ترجمان اور عکاس ہے،ان کا مجموعہ کلام’’تودہ وینہ‘‘ پختون قوم پرستی کے لیے ایک رہنما کتاب کا درجہ رکھتاہے،انہوں نے کہا عوامی نیشنل پارٹی اپنے اسلاف اور محسنوں کو ہمیشہ یاد رکھے گی اور ان کے افکار کو مشعل راہ گردانتی ہے،انہوں نے کہا پختون قومی تحریک کو پروان چڑھانے میں عاصی ہشتنگری جیسے قلم کاروں کے کردار کو فراموش نہیں کیاجاسکتا،اے این پی اپنے قلم کاروں کوقومی سرمایہ سمجھتی ہے اور ان کی خدمات کا ہمیشہ اعتراف کرتی رہے گی۔

صوبائی حکومت کی نااہلی کے باعث صوبے کے مفادات اور حقوق داؤ پر لگے ہوئے ہیں۔ سردار حسین بابک

 March-2016, PRs-2016  Comments Off on صوبائی حکومت کی نااہلی کے باعث صوبے کے مفادات اور حقوق داؤ پر لگے ہوئے ہیں۔ سردار حسین بابک
Mar 292016
 

مورخہ 29مارچ 2016ء بروز منگل

صوبائی حکومت کی نااہلی کے باعث صوبے کے مفادات اور حقوق داؤ پر لگے ہوئے ہیں۔ سردار حسین بابک
صوبہ شدت پسندی ، بدامنی ، بھتہ خوری اور بدانتظامی کی لپیٹ میں ہے۔
اے این پی نے اپنے دور اقتدار میں بدامنی ، دہشتگردی کے خاتمے کے علاوہ ریکارڈ ترقیاتی کام کیے۔
اے این پی پی کے 8 کے ضمنی الیکشن میں بھرپور حصہ لے گی۔ پشاور میں پی کے 8 کے اجلاس سے خطاب

پشاور ( پریس ریلیز) عوامی نیشنل پارٹی نے پشاور کے حلقہ پی کے 8 کے ضمنی الیکشن میں بھرپور طریقے سے حصہ لینے کا فیصلہ کر لیا ہے اور کارکنوں کو ہدایت کی ہے کہ وہ منطم طریقے سے الیکشن میں حصہ لینے کیلئے تیاریاں کریں۔ اس بات کا فیصلہ خدائی خدمتگار غلام محمد کی رہائش گاہ پر منعقدہ اہم اجلاس کے دوران کیا گیا جس میں پارٹی کے تنظیمی عہدیداران ، دیرینہ کارکنوں اور صاحب الرائے مشران کے علاوہ صوبائی جنرل سیکرٹری سردار حسین بابک ، صوبائی سیکرٹری مالیات خوشدل خان ایڈوکیٹ نے خصوصی طور پر شرکت کی۔ اس موقع پر مختلف تجاویز کی روشنی میں فیصلہ کیا گیاکہ پارٹی پی کے 8 کے ضمنی الیکشن میں بھرپور طریقے سے شرکت کرے گی۔
اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے صوبائی جنرل سیکرٹری سردار حسین بابک نے کہا کہ موجودہ حکومت کی تین سالہ ناقص کارکردگی سے صوبے کے عوام بری طرح مایوس ہو گئے ہیں اور ان پر یہ حقیقت واضح ہو گئی ہے کہ تبدیلی اور ترقی کے دعوؤں میں کوئی صداقت نہیں تھی۔ اُنہوں نے کہا کہ صوبائی حکومت نے صوبے کے آئینی حقوق پر مجرمانہ خاموشی اختیار کی ہوئی ہے۔ بیڈ گورننس ، نااہلی ، بدانتظامی اور اقرباء پروری نے صوبے کی مشکلات میں بدترین اضافے کا راستہ ہموارکر دیا ہے اور عوام کے مسائل میں بے پناہ اضافہ ہوا ہے۔ اُنہوں نے کہا کہ صوبے پر شدت پسندوں ، بھتہ خوروں ، جرائم پیشہ افراد اور قبضہ مافیا کا راج ہے۔ اُنہوں نے کہا کہ صوبے کے فنڈز یا تو استعمال نہیں ہو رہے یا ضائع ہو رہے ہیں جس کے باعث صوبے کے حقوق اور مفادات داؤ پر لگے ہوئے ہیں۔ سرکاری ملازمین کی تذلیل کی جا رہی ہے اور مختلف حلقے احتجاج پر ہیں۔ حالت تو یہ ہے کہ حکومت اس بلدیاتی نظام کوناکام کرنے پر تلی ہوئی ہے جس کو پی ٹی آئی نے خود متعارف کرایا ہے۔ دوسری طرف حکومت نے صوبائی اسمبلی اور قانون سازی سے مذاق بنایا ہوا ہے اور صوبے کے وسائل اتحادیوں میں سیاسی اور اقرباء پروری کی بنیاد پر تقسیم کیے جا رہے ہیں۔
اُنہوں نے کہا کہ اے این پی نے اپنے پانچ سالہ دور اقتدار میں صوبے کے حقوق کو تحفظ دیا۔ ریکارڈ ترقیاتی کام کیے ، بدامنی کے خاتمے میں بنیادی کردار ادا کیا اور دہشتگردی کا ڈٹ کر مقابلہ کیا۔ عوام موجودہ حکومت کی نااہلی اور ناکامی سے اس نتیجے پر پہنچے ہیں کہ ان کے حقوق کا تحفظ اے این پی کے علاوہ دوسری کوئی قوت نہیں کر سکتی اور یہی وجہ ہے کہ عوام کی نظریں اے این پی پر لگی ہوئی ہیں اور مستقبل اے این پی کا ہے۔

عوامی نیشنل پارٹی نے پی کے 8کے ضمنی الیکشن کیلئے درخواستیں طلب کر لیں

 March-2016, PRs-2016  Comments Off on عوامی نیشنل پارٹی نے پی کے 8کے ضمنی الیکشن کیلئے درخواستیں طلب کر لیں
Mar 292016
 

مورخہ 29مارچ 2016ء بروز منگل
عوامی نیشنل پارٹی نے پی کے 8کے ضمنی الیکشن کیلئے درخواستیں طلب کر لیں

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی نے پی کے 8پشاور کے ضمنی الیکشن کیلئے خواہش مند امیدواروں سے درخواستیں طلب کر لی ہیں، اے این پی کے صوبائی صدراور پارلیمانی بورڈ کے چیئرمین امیر حیدر خان ہوتی نے خواہشمند امیدواروں کو ہدایت کی ہے کہ وہ 30مارچ تا 4 اپریل تک اپنی درخواستیں بمع فیس کے باچا خان مرکز میں جمع کرا سکتے ہیں ۔