حکومت عوام کو ٹارگٹ کلرزکے رحم و کرم پر چھوڑ کر خاموش تماشائی کا کردار ادا کر رہی ہے

حکومت عوام کو ٹارگٹ کلرزکے رحم و کرم پر چھوڑ کر خاموش تماشائی کا کردار ادا کر رہی ہے،سردار حسین بابک

صوبے کے طول وعرض میں روزانہ کی بنیاد پر دن دہاڑے ڈکیتیاں اور ٹارگٹ کلنگ کے واقعات جاری ہیں۔

نئے پاکستان میں مہنگائی کے سونامی نے جرائم میں بھی بے پناہ اضافہ کر دیا ہے۔

حکمران جماعت کو سرکاری عہدوں کی بندر بانٹ کی تقسیم سے نکل کرمسائل کے حل کی طرف متوجہ ہونا ہو گا۔

مسلط کردہ حکومت سے عوامی مسائل میں اضافہ ہوتا جا رہا ہے،حکمران بوکھلاہٹ کا شکار ہیں۔

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی جنرل سیکرٹری سردار حسین بابک نے صوبے میں بڑھتی ہوئی بد امنی اور ٹارگٹ پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ صوبائی حکومت عوام کو ٹارگٹ کلرز کے رحم و کرم پر چھوڑ کر خاموش تماشائی کا کردار ادا کر رہی ہے ، اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ صوبے کے طول وعرض میں روزانہ کی بنیاد پر دن دہاڑے ڈکیتیاں اور ٹارگٹ کلنگ کے واقعات جاری ہیں اور حکومت عوام کو تحفظ فراہم کرنے میں بری طرح ناکام ہو چکی ہے ، انہوں نے کہا کہ ٹارگٹ کلنگ نے عوام کو ذہنی کرب میں مبتلا کر دیا ہے اور نئے پاکستان میں مہنگائی کے سونامی نے جرائم میں بھی بے پناہ اضافہ کر دیا ہے،سردار حسین بابک نے کہا کہ عوام کی جان و مال کو تحفظ فراہم کرنے کیلئے حکومت کو عملی اقدامات اٹھانا ہونگے، انہوں نے کہا کہ حکمران جماعت کو سرکاری عہدوں کی بندر بانٹ کی تقسیم سے نکلنا ہوگااور عوام کے بنیادی مسائل کے حل کی طرف متوجہ ہونا ہو گا، انہوں نے کہا کہ مسلط کردہ حکومت سے عوامی مسائل میں کمی کی بجائے اضافہ ہوتا جا رہا ہے اور یہی وجہ ہے کہ مسلط کردہ حکمران بوکھلاہٹ کا شکار ہیں جس کا خمیازہ عوام کو بھگتنا پڑ رہا ہے۔

Facebook Comments